اسوہ رسول اکرم صلی اللہ علیہ وسلم (اعلیٰ)

 800.00

اسوہ رسول اکرم صلی اللہ علیہ وسلم (اعلیٰ)

بارگاہِ رسالت میں منامی قبولیت پانے والی مقبول عام کتاب

از عارف باللہ ڈاکٹر عبدالحئی عارفی رحمہ اللہ تعالیٰ

اس کتاب میں پوری زندگی کی سنتیں عام فہم انداز میں بیان کی گئی ہیں ۔

2 in stock

Order This Product On WhatsApp # 03450345581

 

Description

اسوۂ رسولِ اکرم صلی اللہ علیہ وسلم (اعلیٰ)

ڈاکٹر عبدالحئی عارفی رحمہ اللہ تعالیٰ جو شیخ الاسلاہم حضرت مولانا مفتی محمد تقی عثمانی صاحب کے مرشد ہیں ۔ انہوں نے حدیث شریف کی مستند کتابوں سے رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے شمائل و خصائل کو جمع کرکے انسانی زندگی کے ہر پہلو، ہر شعبہ اور ہر حال کے متعلق ہدایات پیش کی ہیں ۔ جن سے اتباع سنت اور اطاعت رسول صلی اللہ علیہ وسلم کا صحیح مفہوم متعین ہوتا ہے ۔

اس کتاب کے شروع میں رنگین تصاویر بھی موجود ہیں جن میں قیصر روم شہنشاہ ہرقل کے نام نامہ رسول صلی اللہ علیہ وسلم ، کسریٰ ایران کے شہنشاہ خسرو پرویز کے نام رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کا مکتوب گرامی اور شاہ مصر مقوقس کے نام مبارک خط شامل ہے ۔

مصنف ڈاکٹر عبدالحئی عارفی رحمہ اللہ تعالیٰ نے اس کتاب کو عجیب و غریب کراماتی انداز میں پایہ تکمیل تک پہنچایا جس کا پس منظر یہ ہے کہ عارف باللہ حضرت ڈاکٹر عبدالحئی عارفی رحمہ اللہ تعالیٰ نے اپنی عملی زندگی کو سنت کے سانچے میں ڈھالنے کے لئے ایک بیاض یعنی ذاتی ڈائری بنائی ہوئی تھی جس میں کتب احادیث سے مسنون اعمال درج فرمائے تھے ۔ کچھ عرصہ بعد یہ ڈائری ایک ضخیم مسودہ کی صورت اختیار کر گئی ۔ جب اہل علم نے دیکھا تو یہ فرمائش کی کہ یہ مسودہ کتابی شکل میں شائع ہوجائے تو اسکا نفع عام ہوجائے گا ۔ نتیجتاً یہ کتاب اسوہِ رسولِ اکرم صلی اللہ علیہ وسلم (اعلیٰ) کتابی شکل میں شائع ہوگئی ۔

یہ کتاب واٹس ایپ پر آرڈر کرنے کے لئے یہ لنک وزٹ کریں
https://wa.me/p/5176901952410606/923450345581

Additional information

Weight 0.582 kg
Binding Type

Perfect Binding with Dust Cover

Number of Pages

480

Delivery Time

5-7 Working Days

Paper Quality

Imported paper fine quality

Published By

Taleefat e Ashrafia

Shipping Charges

FREE

Written By

Hazrat Doctor Muhammad Abdul Hai Arfi

Reviews

There are no reviews yet.

Be the first to review “اسوہ رسول اکرم صلی اللہ علیہ وسلم (اعلیٰ)”

Your email address will not be published. Required fields are marked *